Buzcorner
right way » blog » یکم فروری کو بھی سرکاری اور نجی سکولز کھولنے کا معاملہ لٹک گیا

یکم فروری کو بھی سرکاری اور نجی سکولز کھولنے کا معاملہ لٹک گیا

محکمہ سکول ایجوکیشن پنجاب نے صوبے بھر میں سرکاری اور نجی سکولوں کو یکم فروری سے کھولنے کے فیصلے کو سکولوں کی کرونا رپورٹس سے مشروط کیا ہے۔

شہر میں کرونا وائرس کی دوسری لہر میں شدت آنے کے باعث این سی او سی نے یکم فروری سے چند روز قبل اجلاس بلانے کا فیصلہ کیا ہے جس میں کرونا وائرس کی دوسری لہر سے پیدا ہونے والی صورتحال کا پھر سے جائزہ لیا جائے گا اور فیصلہ کیا جائے گا کہ یکم فروری کو پنجاب بھرکے پرائمری اور مڈل تک ایلمنٹری سکول کھولے جائیں گے یا نہیں۔ این سی او سی نے تمام سرکاری اور نجی سکولوں کو یکم فروری کو کھلنے کی صورت میں روزانہ کی بنیاد کرونا رپورٹ بھجوانے کا حکم دیا اور سکول سربراہان کو پابند کیا ہے کہ وہ اپنے سکول کی کرونا رپورٹ روزانہ 4 بجے تک بھجوا دیں۔

رپورٹ میں پنجاب بھر کے نجی اور سرکاری سکولوں میں کرونا ایس او پیز پر عملدرآمد کے حوالے سے صورتحال کا جائزہ لیا جائے گا۔ موجودہ صورتحال میں والدین اور طلبا و طالبات شدید ذہنی دباؤ کا شکار ہیں ۔

شہر میں کرونا وائرس کی دوسری لہر میں شدت آنے کے باعث این سی او سی نے یکم فروری سے چند روز قبل اجلاس بلانے کا فیصلہ کیا ہے جس میں کرونا وائرس کی دوسری لہر سے پیدا ہونے والی صورتحال کا پھر سے جائزہ لیا جائے گا اور فیصلہ کیا جائے گا کہ یکم فروری کو پنجاب بھرکے پرائمری اور مڈل تک ایلمنٹری سکول کھولے جائیں گے یا نہیں۔ این سی او سی نے تمام سرکاری اور نجی سکولوں کو یکم فروری کو کھلنے کی صورت میں روزانہ کی بنیاد کرونا رپورٹ بھجوانے کا حکم دیا اور سکول سربراہان کو پابند کیا ہے کہ وہ اپنے سکول کی کرونا رپورٹ روزانہ 4 بجے تک بھجوا دیں۔شہر میں کرونا وائرس کی دوسری لہر میں شدت آنے کے باعث این سی او سی نے یکم فروری سے چند روز قبل اجلاس بلانے کا فیصلہ کیا ہے جس میں کرونا وائرس کی دوسری لہر سے پیدا ہونے والی صورتحال کا پھر سے جائزہ لیا جائے گا اور فیصلہ کیا جائے گا کہ یکم فروری کو پنجاب بھرکے پرائمری اور مڈل تک ایلمنٹری سکول کھولے جائیں گے یا نہیں۔ این سی او سی نے تمام سرکاری اور نجی سکولوں کو یکم فروری کو کھلنے کی صورت میں روزانہ کی بنیاد کرونا رپورٹ بھجوانے کا حکم دیا اور سکول سربراہان کو پابند کیا ہے کہ وہ اپنے سکول کی کرونا رپورٹ روزانہ 4 بجے تک بھجوا دیں۔

Read This:  کرونا وائرس کے خدشات پرعسکری قیادت بھی میٹنگ کے لیے بیٹھ گئی آرمی چیف نے خصوصی ہدایات جاری کر دیں

Share

Add comment